موسم کی مولی سے میدے اور یورک ایسڈ کا علاج۔۔۔

جیسا کہ آپ لوگ جانتے ہیں کہ اس موسم میں مولی بہت بہترین پائی جاتی ہے۔اور مولی کا کھانا بہت مفید ثابت ہوتا ہے مولی کے استعمال سے یوریک ایسڈ میں خاطر خواہ کمی کی جاسکتی ہے ایک تحقیق سے ثابت ہوا ہے۔کہ مولی کا استعمال پیلے اور کالے یرقان میں بھی بہت مفید ہے۔

مولی کو اگر دھوکر صاف کر کر چھوٹے چھوٹے ٹکڑوں میں کاٹ کر ایک عدد لیموں ان ٹکڑوں پر چھڑک کر صبح نہار منہ کھایا جائے تو اس سے یوریک ایسڈ میں خاطر خواہ کمی کی جاسکتی ہے۔

جبکہ مولی کو کاٹ کر چھیل کر ٹکڑوں میں کاٹ کر ایک برتن میں رکھ کر ململ کا کپڑا ڈھککر رات کو چھت پے رکھ دیا جائے اور صبح اٹھ کر اسی مولی کو نہار منہ کھا لیا جائے تو وہ معدے مثانے اور جگر کی گرمی کے لیے بہت مفید ثابت ہوتی ہے۔

کیٹاگری میں : صحت