آزاد کشمیر نے قاتل وائرس کو شکست دی

محمد فیضان اسلم خان
………………………………………

کورونا وائرس کی مشکل صورتحال میں ۔ اگر کسی صوبے اور اُسکی حکومت نے سمجھ داری کا مظاہرہ کیا وہ آزاد کشمیر ہے۔ میرا آزاد کشمیر۔ جہاں کی خوبصورتی کی لوگ مثالیں دیتے ہیں۔ دور دور سے لوگ گھومنے آزاد کشمیر آتے ہیں اور یہاں کہ اونچے،اونچے پہاڑاور دلکش نظاروں میں زندگی کو یادگار بناتے ہیں ۔ لیکن جیسے ہی تفتان سے آئے پینتالیس سالہ شخص کے ساتھ کوروناوائرس آزاد کشمیر آیا تو وادی میں خوف و ہراس پھیل گیا دوڑتی بھاگتی زندگی کو بریک لگ گئے۔ ایسے میں آزاد کشمیر کی حکومت نے فوراً ایکشن لیا۔ سب سے ہٹ کراقدامات کیے۔ سخت ترین لاک ڈاؤن کیا۔ سیاحوں کےآزاد کشمیرآنے پر پابندی لگائی۔ کورونا کا پھیلاؤ روکنے کے لئے وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر فرنٹ فٹ پر آگئے ۔ وزیراعظم ہاؤس کو قرنطینہ سینٹر بنا ڈالا۔ کہا وزیراعظم ہاؤس پر عوام کاحق زیادہ ہے۔دکان،کاروبار سب کچھ بند کرنا پڑا۔انتظامیہ نے سخت ترین اقدامات اٹھاتے ہوئے وادی میں واپس آنے والوں کو چودہ دن تک قرنطینہ سینٹر میں رکھنے کا حکم دیا۔وزیراعظم راجہ فاروق کی کاوشیں اور محنت رنگ لائی۔

جہاں دنیا بھر میں روزانہ کیسز کی تعداد میں دن بہ دن اضافہ ہورہا ہے وہاں آزاد کشمیر میں کورونا مریضوں میں کمی آنے لگی ، کیسز کی تعداد پچاس تک بھی نہیں پہنچی۔انچاس لوگ وائرس کی زد میں آئے۔ آزاد کشمیر واحد صوبہ ہے جہاں خیرسے کوئی بھی ہلاکت سامنے نہیں آئی۔۔ملک کے مختلف صوبوں میں صوبائی حکومتوں کے انتظامات اپنی جگہ لیکن وہاں یہ وبا کم ہونے کے بجائے بڑھ رہی ہے. ہلاکتوں میں تیزی سے اضافہ اس بات کی طرف اشارہ کررہا ہے کہ انتظامات ،لاک ڈاؤن ،سب کچھ کرنے کے باوجود صوبائی حکومتیں اس وبا کو کنٹرول نہیں کرپارہیں ہیں۔

کہتے ہیں نا مرض بڑھتا گیا جوں جوں دوا کی ۔یہ مہلک وبا جس کا علاج صرف اور صرف سماجی دوری ،صفائی اور تنہائی ہے اس سلسلے میں ملک بھر تو کیا دنیا بھر کی بڑی بڑی سپرپاور نے بھی گھٹنے ٹیک دئیے ۔امریکا جیسی سپرپاور میں مریضوں کی تعداد اور ہلاکتوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ اس بات کا منہ بولتا ثبوت ہے کہ انتظامیہ کنٹرول کرنے میں ناکام رہی یہی حال دنیا بھر کا ہے ۔جہاں دیکھو مریضوں کی تعداد بڑھتی جارہی ہے ۔۔ہلاکتوں میں دن بدن اضافہ ہورہا ۔۔مہلک وبا تیزی سے لوگوں کی زندگیا ں نگل رہی ہے ایک چھوٹا سا وائرس جو شاید انسانی آنکھ دیکھ بھی نہیں سکتی لاکھوں لوگوں کو موت کے گھاٹ اتارنے والا قاتل وائرس اب تک دنیا بھر میں بےقابو ہے ۔۔تو پھر آزاد کشمیر کے اقدامات پر وزیر اعظم آزاد کشمیر کی کاوشوں پر ان سب اقدامات پر تعریف تو بنتی ہے ۔میں تو وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق کو خراج تحسین پیش کرتاہوں۔ساتھ ہی تمام صوبوں کی انتظامیہ سے درخواست بھی کرتا ہوں کہ وہ ان سے ہی کچھ سیکھ لیں۔ اور اپنے اپنے صوبوں کو کورونا سے بچالیں۔تاکہ قیمتی انسانی جانیں ضائع نہ ہوں.